آفتاب اقبال شمیم
جیون 16 فروری 1936
جمن پو جیلم برطانوی ہندستان
گن شاعر

آفتاب اقبال شمیم اردو دے شاعر نیں۔ اوہ 16 فروری 1936 نوں جیلم برطانوی ہندستان وچ جمے۔ گورڈن کالج راولپنڈی تے بیجنگ یونیورسٹی وچ پڑھایا۔

آفتاب اقبال شمیم دی غزللکھو

نظر کے سامنے رہنا نظر نہیں آنا

ترے سوا یہ کسی کو ہنر نہیں آنا

یہ انتظار مگر اختیار میں بھی نہیں

پتہ تو ہے کہ اُسے عمر بھر نہیں آنا

یہ ہجرتیں ہیں زمین و زماں سے آگے کی

جو جا چکا ہے اُسے لوٹ کر نہیں آنا

ذرا سی غیب کی لکنت زباں میں لاؤ

بغیر اس کے سخن میں اثر نہیں آنا

ہر آنے والا نیا راستہ دکھاتا ہے

اسی لئے تو ہمیں راہ پر نہیں آنا

ذرا وہ دوسری کھڑکی بھی کھول کمرے کی

نہیں تو تازہ ہوا نے ادھر نہیں آنا

کروں مسافتیں ناآفریدہ راہوں کی

مجھ ایسا بعد میں آوارہ سر نہیں آنا